زكاۃ سے متعلق

followsalaf نے 'آپ کے سوال / ہمارے جواب' میں ‏جولائی 9, 2013 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. followsalaf

    followsalaf -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏مارچ 28, 2011
    پیغامات:
    236
    السلام علیکم،

    زكاۃ قیمت خرید([en]purchasing price[/en]( پر دی جائیگی یا قیمت بیع [en]SELLING PRICE[/en] پر دی جایگی کیونکہ دونوں قیمتوں میں فرق رہتا ہے

    آپکے علمی اور مدلل جواب کا انتظار ہے

    جزاک اللہ خیرا
     
  2. رفیق طاھر

    رفیق طاھر علمی نگران

    رکن انتظامیہ

    ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏جولائی 20, 2008
    پیغامات:
    7,938
    زکاۃ قیمت خرید پر ہی ادا کی جائے گی , کیونکہ قیمت خرید اصل زر ہے اور قیمت فروخت میں منافع بھی شامل ہوتا ہے ۔ جب منافع ابھی تک حاصل ہی نہیں ہوا تو اس پر زکاۃ کیسی ؟
     
  3. followsalaf

    followsalaf -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏مارچ 28, 2011
    پیغامات:
    236
    جزاک اللہ خیرا!

    ایک شخص کے پاس سونا موجود ہے تو یہ شخص کس حساب سے زکات دے؟

    دکاندار سو نا گاہک کو بیچتا ہے (جسمیں منافع اور لیبر چارجیس بھی شامل ہوتے ہیں( مثلاّ 20،000 روپیہ جبکہ جو خود سونا گاہک خریدتا ہے تو مثلاّ 15،000 روپیہ دیتا ہے۔ عام ادمی جسکے پاس سونا ہے وہ زکات کس حساب سے دیگا؟

    کیا وہ دکاندار سے یہ دریافت کریگا میرے پاس اتنا سونا ہے تم اسکی کتنی قیمت خرید لگاتےہو یا وہ یہ دریافت کریگا کہ سونے کا کیا ریٹ چل رہاہے (قیمت فروخت(
    آپکے جواب کا بڑی شدت سے انتظار ہو رہا ہے
     
  4. رفیق طاھر

    رفیق طاھر علمی نگران

    رکن انتظامیہ

    ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏جولائی 20, 2008
    پیغامات:
    7,938
    وہ سونے کی قیمت کے حساب سے زکاۃ ادا کرے گا ۔ یعنی جتنا سونا اسکے پاس موجود ہے اتنے سونے کی قیمت معلوم کرکے اس پر زکاۃ ادا کرے گا ۔ زرگر سے زیور بنواتے وقت جو فیس وغیرہ ادا کی گئی وہ شامل نہیں ہوگی ۔
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں