ادب اور اسلامی کسوٹی

باذوق نے 'نقد و نظر' میں ‏مارچ 24, 2008 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. باذوق

    باذوق -: ممتاز :-

    شمولیت:
    ‏جون 10, 2007
    پیغامات:
    5,623
    بسم اللہ الرحمٰن الرحیم

    ادب اور اسلامی کسوٹی

    یہ میرے لیے ضروری امر ہے کہ ادب کی تخلیق کے وقت 'اسلامی کسوٹی' کا بھی خیال رکھوں !
    میرے لیے یہ کیسے ممکن رہے گا کہ جب اپنے دماغ کو کسی ادبی کاوش میں لگاؤں تو اس نظریہئ حقیقت کو نوچ کر ذہن سے الگ کر دوں جو اسلام نے مجھے دیا ہے۔ میرے لیے یہ کیسے ممکن ہوگا کہ میں جس عظیم سچائی پر ایمان رکھتا ہوں، کسی نظم کا خاکہ بناتے وقت، کسی افسانے کا پلاٹ سوچتے اور کسی کردار کے نقوش مرتب کرتے وقت اس ایمان کو سینے سے اٹھا کر باہر رکھ دوں؟ میرے لیے یہ کیسے ممکن ہوگا کہ اسلام خیالات و جذبات اور حوادث و تاثرات ، اخلاق و کردار، تمدنی اقدار اور تاریخی روایات میں خیر و شر کی جو تقسیم کرتا ہے اور اس تقسیم کے لیے جو کسوٹی استعمال کرتا ہے، اسے قلم ہاتھ میں لیتے ہی مسترد کر دوں؟ یعنی شعر و افسانہ میں مَیں کوئی دوسرا نظریہ ، کوئی دوسرا طرزِ فکر، کوئی دوسرا ایمان اور کوئی دوسرا معیارِ نیک و بد استعمال کروں؟

    تحریر : نعیم صدیقی
     
  2. لالکائی

    لالکائی -: محسن :-

    شمولیت:
    ‏اکتوبر، 15, 2008
    پیغامات:
    175
    درست نقطہ نظر ہے۔
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں