امت مسلمہ پر عذاب؟؟

حسیب رزاق نے 'آپ کے سوال / ہمارے جواب' میں ‏نومبر 23, 2015 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. حسیب رزاق

    حسیب رزاق -: معاون :-

    شمولیت:
    ‏فروری 8, 2013
    پیغامات:
    103
    السلام علیکم و رحمتہ اللہ و برکاتہ
    اس حدیث کی تشریح کر دیں کہ کیا امت مسلمہ پر آخرت میں عذاب نہیں ہو گا
    سیدنا ابوموسیٰ اشعری رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ” میری اس امت پر اللہ کی رحمت ہے ، آخرت میں اس پر عذاب نہیں ، اس کا عذاب دنیا میں فتنوں ، زلزلوں اور قتل کی صورت میں ہے ۔ “ سنن ابو داؤد-4278
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 2
  2. عائشہ

    عائشہ ركن مجلس علماء

    شمولیت:
    ‏مارچ 30, 2009
    پیغامات:
    24,485
    وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ
    بعض محدثین نے اس حدیث کو معلول قرار دیا ہے۔
    کچھ دوسرے محدثین کے نزدیک یہ صحیح ہے۔
    ان کے مطابق اس حدیث کا معنی ہے کہ دوسری امتوں کے مقابلے میں امت مسلمہ پر اللہ کی رحمت ہے۔ اور اس امت کے جو لوگ کبیرہ گناہوں سے بچتے ہیں، ان کوجو تکلیفیں دنیا میں پہنچیں گی اس کی وجہ سے ان کے صغیرہ گناہ مٹ جاتے ہیں۔ ایسے لوگوں پر آخرت کا عذاب نہیں ہو گا۔
    اس کا یہ مطلب نہیں کہ امت مسلمہ کا ہر شخص خصوصا کبیرہ گناہ کرنے والے بھی اس میں شامل ہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ x 3
    • متفق متفق x 1
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں