صلی الله علیه وسلم یا (SAW)

اہل الحدیث نے 'تاریخ اسلام / اسلامی واقعات' میں ‏ستمبر 22, 2020 کو نیا موضوع شروع کیا

  1. اہل الحدیث

    اہل الحدیث -: رکن مکتبہ اسلامیہ :-

    شمولیت:
    ‏مارچ 24, 2009
    پیغامات:
    5,050
    صلی الله علیه وسلم یا (SAW)؟
    ـــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــــ

    شیخ غلام مصطفیٰ ظہیر امن پوری حفظه الله سے پوچھا گیا کہ:
    "انگلش میں ”صلی الله علیه وسلم“ کی جگہ (SAW) لکھنا کیسا ہے؟"

    تو آپ حفظه الله نے جواب دیا:
    "نا جائز ہے۔ مختصر درود کی کوئی حیثیت نہیں، چاہے وہ انگلش میں ہو یا کوئی اور زبان میں۔ نبی کریم ﷺ کے نام کے ساتھ ”صلی الله علیه وسلم‘‘ مکمل لکھنا چاہیے۔
    حافظ ابو القاسم حمزہ بن محمد کنانی رحمه الله (٣٥٧ ھ) کہتے ہیں:
    ’’میں حدیث لکھا کرتا تھا، جب نبی کریم ﷺ کا ذکر آتا، تو (صَلَّی اللّٰهُ عَلَيْهِ) لکھ دیتا، (وَسَلَّمَ) نا لکھتا۔ ایک دن خواب میں نبی کریم ﷺ کی زیارت ہوئی، فرمایا: درود پورا کیوں نہیں لکھتے؟ اس کے بعد جب بھی میں نے (صَلَّی اللّٰهُ عَلَيْهِ) لکھا، تو ساتھ (وَسَلَّمَ) بھی لکھا۔‘‘
    (مقدمة ابن الصلاح، ص: ٣٠٠، وسنده صحيح)

    [ فتاوى امن پوری، قسط: ١١، صفحه: ١ ]
     
Loading...

اردو مجلس کو دوسروں تک پہنچائیں